Official Website

سائفر اور سازش کا نتیجہ این آر او ٹو تھا جو مل گیا: بابر اعوان

29

اسلام آباد: پاکستان تحریک انصاف کے رہنما بابر اعوان نے کہا ہے کہ سائفر اور سازش کا نتیجہ این آر او ٹو تھا جو مل گیا، جس ملک میں شراب پر پابندی نہیں اس ملک میں بچوں کی چاکلیٹ پر پابندی ہے تاکہ اپنی کوکومو بیچی جا سکے۔

اسلام آباد میں احتساب عدالت کے باہر میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے بابر اعوان نے کہا کہ عمران خان نے اپنے دور میں این آر او دینے سےانکار کیا، 1200 ارب روپے کے مقدمات ایک ایک کر کے ختم ہوجائیں گے، عمران خان پھر آرہا ہے، خوفزدہ ہونا چھوڑیں اور الیکشن کرائیں۔

انہوں نے کہا کہ احتساب عدالت کی عمارت سائفر نوازش سازش اور مداخلت کے بعد خالی ہونے جا رہی ہے، سائفر کا نتیجہ گرینڈ این آر او ٹو تھا۔

بابر اعوان نے وفاقی وزیر منصوبہ بندی احسن اقبال کے بیان پر تنقید کرتے ہوئے کہا کہ پٹرول اور چینی کو مصنوعی بحران کہنے والے آج کہتے ہیں چائے بھی چھوڑ دو، ڈالر 212 تک پہنچ چکا ہے، ابھی مہنگائی آئی ہے، پندرہ دن بعد تباہی آنے والی ہے۔

انہوں نے کہا کہ لوگوں کی حکومت لوگوں کے ذریعے آتی ہے، جب کہ یہاں ایلیٹ کی حکومت ایلیٹ کے ذریعے بنائی گئی، عمران خان سے خوف زدہ ہونا چھوڑ دو، حکومت اس بات کا جواب دے کہ سرکاری ملازم کس کی اجازت سے اسرائیل گیا؟ سرکاری ملازم کی واپسی پر اس سے کوئی تحقیقات ہوئی کہ وہ اسرائیل کیوں گیا؟

میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے بابر اعوان نے کہا کہ ناموس رسالت پر ہماری جان بھی قربان ہے، اسرائیل کو کسی قیمت پر تسلیم کرنے کی اجازت نہیں دیں گے، اسرائیل کے ساتھ خفیہ ملاقاتیں ہورہی ہیں، عمران خان بہت جلد دوبارہ آنے والے ہیں۔