Official Website

خاتون شادی کے 10 ماہ بعد شوہر کی جنس جان کر دنگ رہ گئی

9

انڈونیشیا سے تعلق رکھنے والی ایک خاتون شادی کے 10 ماہ بعد اس وقت دنگ رہ گئی جب اسے معلوم ہوا کہ اس کا  شوہر اصل میں عورت ہے۔

غیر ملکی میڈیا رپورٹس کے مطابق انڈونیشیا کی ایک خاتون کو  شادی کے 10 ماہ بعد اس وقت بڑا جھٹکا لگا جب اسے احساس ہوا کہ اس کا شوہر ایک عورت ہے جو مرد بن کر اسے دھوکا دے رہا تھا۔

خاتون نے سوشل میڈیا پر دعویٰ کیا کہ میں مئی 2021 میں اپنے شوہر سے ڈیٹنگ ایپ پر ملی اور مجھے معلوم ہوا کہ وہ شخص سرجن ہے اور اس کا کاروبار بھی ہے۔ تاہم کچھ عرصے بعد ہم نے ایک خفیہ تقریب میں شادی کی اور گھر سے دوسری جگہ منتقل ہوگئے۔

بھارتی میڈیا کے مطابق جوڑے کے جنوبی سماترا چلے جانے کے بعد معاملات خراب ہو گئے اور دلہا باقاعدگی سے دلہن کے خاندان کو پیسوں کے لیے تنگ کرتا رہا جبکہ اس نے بیوی کو گھر میں قید کردیا جس کے وجہ سے اس کا والدین سے رابطہ ختم ہوگیا تھا۔

خاتون نے دعویٰ کیا کہ شوہر نے اس کے خاندان سے لاکھوں روپے کا معاہدہ کیا تھا جبکہ شادی کا کوئی قانونی ثبوت نہ ہو اس لیے انہیں چھپ کر شادی کرنی پڑی۔ 

رپورٹس کے مطابق بیٹی کی اطلاع موصول نہ ہونے پر والدین نے پولیس سے رابطہ کیا جس کے بعد  رواں سال اپریل میں جوڑے کا سراغ لگایا گیا۔

تاہم پولیس انٹرویو کے دوران خاتون کے شوہر کے بارے میں معلوم ہوا کہ وہ ایک عورت ہے۔

 ازدواجی تعلقات کے حوالے  سے خاتون نے  بتایا کہ اس کا پارٹنر ہمیشہ ہم بستری سے پہلے کمرے میں مکمل اندھیرا کردیا کرتا تھا جبکہ آنکھوں پر پٹی باندھنے پر بھی اصرار کرتا تھا تاکہ کچھ نظر نہ آسکے۔

اطلاعات کے مطابق دلہن نے 14 جون کو انڈونیشیا کی جامبی ڈسٹرکٹ کورٹ میں اپنے شوہر کے خلاف مقدمہ درج کروادیا ہے ۔