Official Website

پختونخوا کے بڑے اسپتالوں میں صحت کارڈ کے تحت ہونیوالی اوپن ہارٹ سرجری بند

62

پشاور سمیت خیبرپختونخوا کے تمام بڑے نجی اسپتالوں میں صحت سہولت پروگرام کے تحت ہونے والی اوپن ہارٹ سرجری بند کر دی گئی۔

صوبے کے تمام بڑے نجی اسپتالوں میں صحت کارڈ کے ذریعے دل کے آپریشنز بند ہونے کے باعث مریضوں کو شدید پریشانی کا سامنا ہے۔

ایسوسی ایشن آف کارڈیو سرجن کے چیئرمین ڈاکٹراعظم جان کا کہنا ہے کہ نجی اسپتالوں میں دل کے آپریشن بند کر دیے ہیں کیونکہ ڈالر مہنگا ہونے کی وجہ سے دل کی سرجری کے آلات مہنگے ہو گئے ہیں۔

ڈاکٹر اعظم جان کا کہنا ہے کہ اوپن ہارٹ سرجری پر 5 سے 6 لاکھ روپے کا خرچ آتا ہے جبکہ دل کے آپریشن کے لیے صحت کارڈ میں 2 لاکھ 80 ہزار روپے مختص ہیں، صحت کارڈ میں امراض قلب کے علاج کے لیے مختص رقم بڑھائی جائے۔

دوسری جانب ڈائریکٹر صحت سہولت پروگرام ڈاکٹر محمد ریاض تنولی کا کہنا ہے کہ اسپتالوں میں امراض قلب کے آپریشن ہورہے ہیں، ڈاکٹرز کی فیسوں کا مسئلہ ہے جسے جلد حل کر لیا جائے گا۔