Official Website

امریکا: عافیہ صدیقی کی رہائی کیلیے پولیس مقابلے میں ہلاک شخص کی شناخت ہوگئی

32

ٹیکساس:
امریکا میں یہودی عبادت گاہ ’’بیت اسرائیل‘‘ میں داخل ہونے اور پولیس مقابلے میں مارے جانے والا مسلح شخص برطانوی شہری نکلا جس کی شناخت فیصل اکرم کے نام سے ہوئی ہے۔

امریکی خبر رساں ادارے کے مطابق ریاست ٹیکساس میں ’’بیت اسرائیل‘‘ نامی یہودی عبادت گاہ میں مسلح شخص اُس وقت داخل ہوا تھا جب لوگ عبادت میں مصروف تھے۔

مسلح شخص کے بیت اسرائیل میں داخل ہونے کے بعد اندر سے دھماکے اور فائرنگ کی آوازیں بھی سنائی گئیں تھیں، جس کے بعد پولیس اور حساس اداروں نے فوری طور پر عبادت گاہ کو گھیرے میں لیا۔

مسلح شخص نے راہب سمیت 5 افراد کو یرغمال بنایا جس کے بعد اُس نے ایک یرغمالی کو جانے کی اجازت دیدی جس نے پولیس کو بتایا کہ اغوا کار راہب کے بدلے عافیہ صدیقی کی رہائی چاہتا ہے۔

اغوا کار نے کئی بار چیختے ہوئے پولیس اہلکاروں کو بتایا کہ وہ کسی کو بھی نقصان پہنچانا نہیں چاہتا بلکہ وہ خود ہی جلد مرنے والا ہے۔ مسلح شخص نے عافیہ صدیقی سے بات کرانے کا مطالبہ بھی کیا۔

دس گھنٹے سے زائد تک اغوا کار نے پولیس اور سیکیورٹی اہلکاروں سے مختلف طریقوں سے بات چیت کرتا رہا اور عافیہ صدیقی کی رہائی پر بضد رہا اسی دوران موقع پاکر امریکی فوجی کسی طرح اندر داخل ہونے میں کامیاب ہوگئے۔