Official Website

مہنگائی کی وجہ سے تنخواہ دار طبقے کی مشکلات کا احساس ہے، وزیراعظم

78

اسلام آباد: وزیراعظم عمران خان نے کہا ہے کہ مہنگائی کی وجہ سے تنخواہ دار طبقے کی مشکلات کا احساس ہے۔

اسلام آباد میں اے ایچ آفیسرز ریزیڈینشیا اور پی ایچ اے اپارٹمنٹس کی افتتاحی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے عمران خان کا کہنا تھا کہ مجھے احساس ہےکہ مہنگائی کی وجہ سے تنخواہ دارطبقہ مشکل میں ہے مگر اب تنخواہ دار لوگ بھی باآسانی گھر خرید سکتے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ کرائےکی رقم بینکوں کو قسطوں کی صورت میں ادا کر کے کوئی بھی شخص گھر کا مالک بن سکتا ہے، اب اگرآپ کے پاس گھربنانےکی رقم نہیں توبینکوں سےقرضہ حاصل کرسکتے ہیں۔

وزیراعظم کا کہنا تھا کہ عام آدمی کوقرضوں کی فراہمی کیلئےبینک اسٹاف تربیت یافتہ نہیں تھا مگر اب بینک کا عملہ تمام لوگوں کے ساتھ اچھا سلوک کرتا ہے، پاکستان میں عام آدمی کے لیے بینک کے ذریعے گھر خریدنے کا کوئی طریقہ رائج نہیں تھا مگر اب ایسا نہیں ہوگا۔

عمران خان کا کہنا تھا کہ فورکلوژرلاپاس کرانےمیں ڈھائی سال کا عرصہ لگا، پاکستان میں گھروں کی بہت کمی ہے اس لیے ہم نے ہاؤسنگ انڈسٹری پر توجہ دی کیونکہ ہاؤسنگ انڈسٹری ملکی معیشت کو کھڑا کردیتی ہے، اس صنعت کے ساتھ 30 انڈسٹریز منسلک ہیں۔

وزیراعظم کا کہنا تھا کہ گزشتہ 2 برس کے دوران ہاؤسنگ سیکٹر پر عروج آیا، سیمنٹ اور اسٹیل کی ریکارڈ فروخت ہوئی، ہم نے گھروں کے لیے قرضوں میں آسانی پیدا کی ہے، جس کے بعد اب تنخواہ دار طبقہ بھی باآسانی اپنا گھر خرید سکتا ہے۔

عمران خان کا مزید کہنا تھا کہ عالمی ادارے پاکستان کی گروتھ کو مستحکم قرار دے رہے ہیں جبکہ عالمی بینک کی رپورٹ کےمطابق پاکستان میں غربت میں کمی آئی ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ پاکستان کی برآمدات، ٹیکس اور زرمبادلہ کے ذخائر ریکارڈ سطح پر پہنچ چکے ہیں۔