Official Website

‘اپوزیشن کے پاس ووٹ مکمل ہوتے تو حکومت میں ہوتے، اب دائیں بائیں دیکھیں گے’

23

اسلام آباد: شاہ محمود قریشی نے کہا ہے کہ پی ڈی ایم کی اپنی صفوں میں یکسوئی نہیں، اپوزیشن کے پاس اگر ووٹ مکمل ہوتے تو حکومت میں ہوتے، یہ لوگ اب دائیں بائیں دیکھیں گے۔

اپوزیشن کے تحریک عدم اعتماد کے اعلان پر اپنے ردعمل میں وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے کہا کہ تحریک عدم اعتماد لانا اپوزیشن کا آئینی استحقاق اور اس کا مقابلہ کرنا ہمارا آئینی حق ہے، انہوں نے بارہا کوششیں کیں لیکن پے در پے ناکامیاں ہوئیں، امید ہے ان کی یہ کوشش بھی کامیاب نہیں ہو گی، تحریک انصاف کے نشان پر کامیاب ہونے والے تمام ممبران قومی اسمبلی ڈٹ کر اپنے قائد اور کپتان کا دفاع کریں گے، تحریک انصاف کے جتنے اراکین قومی اسمبلی ہیں اور جتنی ہماری حلیف جماعتیں ہیں، ہم سب کا سیاسی و اخلاقی فرض بنتا ہے کہ سب مل کر اس تحریک کو شکست دیں۔

شاہ محمود قریشی کا کہنا تھا کہ اپوزیشن نے 2018 کے انتخابات کے فوری بعد اپنی کارروائیوں کا آغاز کر دیا تھا، انہوں نے وزیراعظم عمران خان کو اسمبلی میں پہلی تقریر بھی جم کر نہیں کرنے دی، ان کے ارادے پہلے دن سے واضح دکھائی دے رہے تھے، ہمارے پاس ہر لحاظ سے دفاع کرنے کی صلاحیت موجود ہے، پی ڈی ایم کی اپنی صفوں کے اندر ابھی تک یکسوئی نہیں، البتہ تحریک عدم اعتماد ان کی قیادت کی خواہش اور ضرورت ہو سکتی ہے، یہ ان پر مقدمات کے دباؤ کا تقاضا بھی ہو سکتا ہے۔