Official Website

اسلام آباد ہائیکورٹ: فیصل واوڈا کی تاحیات نااہلی کے خلاف درخواست مسترد

53

لاہور:  وزیراعظم عمران خان نے کہا ہے کہ بلدیاتی میدان تحریک انصاف کا ہے، بلدیاتی ٹکٹوں کے فیصلے اتفاق رائے سے کیئے جائیں۔ سب تیاری کریں۔ انشاللہ ہم پنجاب میں بلدیاتی انتخابات جیتیں گے۔

لاہور میں موجود وزیراعظم نے لاہور ڈویژن کے ارکان اسمبلی سے ملاقات کی، اس دوران ارکان اسمبلی نے بلدیاتی حلقہ بندیوں کے حوالے سے تحفظات کا اظہار کیا۔ الیکشن کمیشن کی حلقہ بندیوں پر سب سے زیادہ لاہور اور سرگودھا کے ارکان نے شکایات کیں۔

وزیراعظم نے ارکان کو مقررہ مدت میں الیکشن کمیشن کے سامنے اعتراضات دائر کرنے کی ہدایت کرتے ہوئے کہا کہ بلدیاتی الیکشن میں پارٹی کی تنظیم اور ارکان اسمبلی ملکر کام کریں، بلدیاتی میدان تحریک انصاف کا ہے، بلدیاتی ٹکٹوں کے فیصلے اتفاق رائے سے کیئے جائیں۔

اس سے قبل وزیر اعظم عمران خان نے ڈی جی خاں ڈویژن کے ارکان اسمبلی کے اجلاس کی صدارت کی، اجلاس کے دوران بلدیاتی انتخابات کے امور پر منتخب نمائندوں نے تجاویز دیں، ارکان اسمبلی نے انڈس ہائی وے کو جلد بنانے کا مطالبہ کیا اور خالی آسامیوں پر بھرتی کا عمل تیز کرنے کی گزارش کی۔

ارکان اسمبلی نے صوبائی وزیر تعلیم کے حوالے سے شکایات کے انبار لگاتے ہوئے کہا کہ مراد راس کا رویہ ارکان اسمبلی کے ساتھ مناسب نہیں ہوتا۔ بجلی کے میٹر لگوانے میں چھ چھ ماہ لگ جاتے ہیں۔

اس موقع پر وزیراعظم نے کہا کہ ارکان اسمبلی بلدیاتی انتخابات کے لئے بھرپور تیاری کریں، اس بار ٹکٹوں کے فیصلے اتفاق رائے سے کیے جائیں، سب ملکر بلدیاتی انتخابات کی تیاری کریں۔ انشاللہ ہم پنجاب میں بلدیاتی انتخابات جیتیں گے۔

پنجاب میں پہلے مرحلے کے بلدیاتی انتخابات 29 مئی کو کرانے کا فیصلہ

الیکشن کمیشن آف پاکستان نے خیبرپختونخوا کے بعد پنجاب میں بھی پہلے مرحلے کے بلدیاتی انتخابات کرانے کا فیصلہ کر لیا۔

الیکشن کمیشن کا اجلاس چیف الیکشن کمشنر سکندر سلطان راجہ کی سربراہی میں ہوا۔ جس میں فیصلہ کیا گیا پنجاب میں پہلے مرحلے کے بلدیاتی انتخابات 29 مئی 2022ء کو ہوں گے۔

ترجمان الیکشن کمیشن کے مطابق پہلے مرحلے میں ڈیرہ غازی خان، راجن پور، مظفر گڑھ، لیہ، خانیوال، وہاڑی، بہاولپور، پاکپتن، ٹوبہ ٹیک سنگھ، ساہیوال، خوشاب، سیالکوٹ، گجرات، حافظ آباد، منڈی بہاؤالدین، جہلم اور اٹک میں الیکشن کروائے جائیں گے۔