Official Website

یوکرین میں محصور 2 ہزار پاکستانیوں کی واپسی کے لیے فلائٹ آپریشن تیار

17

کراچی: پاکستان انٹرنیشنل ایئرلائن (پی آئی اے) نے یوکرین میں پھنسے پاکستانیوں کو واپس لانے کے لیے آپریشن کا آغاز کردیا۔

 یوکرین جنگ اور پھنسے پاکستانیوں کے معاملے پر سی ای او پی آئی اے اور یوکرین میں پاکستانی سفیر میجر جنرل(ر) نوئل کھوکھر کے درمیان رابطہ ہوا، جس میں پاکستانی شہریوں اور طالب علموں کے محفوظ انخلا پر تبادلۂ خیال کیا گیا۔

سی ای او پی آئی اے کی پیشکش پر یوکرین میں موجود 2 ہزار پاکستانی طالب علموں کی وطن واپسی کیلئے آپریشن تیار کرلیا گیا، جس پر یوکرین میں تعینات پاکستانی سفیر نے تمام پاکستانی طالب علموں کو یوکرین کے شہر ٹرنوپل میں جمع ہونے کی ہدایت کردی ہے۔

رپورٹ کے مطابق تمام پاکستانی طالب علم یوکرین کے شہر ٹرنوپل میں یکجا ہوں گے، پی آئی اے کا بوئنگ 777 طیارہ پولینڈ سے طالب علموں کو وطن واپس پہنچائے گا۔

سی ای او پی آئی اے ایئرمارشل ارشد ملک نے بتایا کہ یوکرین سے پاکستانیوں کی واپسی کے لیے پرواز کی تیاری کی جارہی ہے، طالب علموں کے پولینڈ پہنچتے ہی طیارے کو روانہ کردیا جائے گا۔

انہوں نے کہا کہ ہم وطنوں کو ان کے گھروں تک واپس پہنچانے کیلئے ہر ممکن اقدامات کریں گے، پی آئی اے کی یہ ہی روایت رہی کہ جب ملک کو ضرورت پڑتی ہے وہ قدم بڑھاتی ہے۔

واضح رہے کہ روس کی جانب سے یوکرین پر ہونے والے حملے کے بعد دو ہزار سے زائد پاکستانی طالب علم اور شہری یوکرین میں محصور ہیں، جنہوں نے اپنی باحفاظت وطن واپسی کے لیے حکومت سے درخواست بھی کی تھی۔