Official Website

ماہرین نے مشینی ’جاسوس ٹڈا‘ تیار کرلیا

53

سائسنی ماہرین نے ایک ایسا شاندار روبوٹک ٹڈا تیار کیا ہے جس پر کسی کو شک بھی نہیں ہوگا اور اسے جاسوسی کے لیے بھی استعمال کیا جاسکے گا۔

پیٹسبرگ یونیورسٹی کے انجینئرز کیڑے نما روبوٹس بنانے میں مہارت رکھتے ہیں جو مشکل مقامات پر پہنچنے والی جگہوں پر پہنچنے اور نگرانی کرنے کی صلاحیت رکھتے ہیں۔

اسی یونیورسٹی کے طالب علموں نے ماہر اساتذہ کی نگرانی میں مشینی جاسوس ٹڈا تیار کیا ہے، جس کے بارے میں دعویٰ کیا گیا ہے کہ یہ مستقبل میں بہت سارے اہم کاموں کے لیے استعمال کیا جاسکے گا۔

صنعتی انجینئرنگ میں پی ایچ ڈی کے طالب علم کے طور پر پروجیکٹ کی قیادت کرنے والے جونفینگ گاؤ نے کہا کہ ’ان روبوٹس کو امیجنگ یا ماحولیاتی تشخیص کے لیے محدود علاقوں تک رسائی، پانی کے نمونے لینے، یا ساختی تشخیص کے لیے استعمال کیا جاسکتا ہے‘۔

انہوں نے کہا کہ جاسوس ٹڈا پولیمر کا استعمال کرتے ہوئے بنایا گیا ہے جو بجلی سے چند گھنٹوں میں چارج کیا جاسکتا ہے جبکہ اسکی جوڑائی 10 ملی میٹر ہے۔