Official Website

طالبان کا اقوام متحدہ کے افغانستان میں امدادی کام جاری رکھنے کے فیصلہ کا خیرمقدم

65

کابل: اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل میں افغانستان کے لیے خصوصی مشن UNAMA کی ایک سال کی تجدید کی قرارداد منظور کرلی گئی جس کا طالبان حکومت نے خیر مقدم کیا ہے۔

عالمی خبر رساں ادارے کے مطابق اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل میں نارروے نے افغانستان کے لیے خصوصی مشین UNAMA کی ایک سال تجدید کی قراردار پیش کی جسے 14 ووٹوں کی حمایت کے ساتھ منظور کر لیا گیا۔

روس نے ووٹنگ میں حصہ لینے سے یہ کہتے ہوئے انکار کردیا کہ طالبان حکومت کے قیام کے بعد سے افغانستان میں پیدا ہونے والی حقیقی صورت حال سے سے لاعلم ہیں۔ روس نے یہ اعتراض بھی اُٹھایا کہ مسودے میں افغانستان کے نئے حکمرانوں کو زکر بھی ہونا چاہیئے تھا۔
طالبان کی حکومت کے قیان کے بعد اقوام متحدہ کے خصوصی مشن UNAMA کو معطل کردیا گیا تھا تاہم بعد میں ایک سال کے لیے بحال کردیا گیا تھا اور اب دوبارہ ایک سال کی تجدید کردی گئی ہے۔

یوں تو اقوام متحدہ نے خصوصی مشن کو کام کرنے کی اجازت دیدی ہے تاہم ابھی تک طالبان حکومت کو تسلیم نہیں کیا ہے۔ UNAMA اب مزید ایک سال تک افغانستان میں اپنے امدادی کام جاری رکھے گا۔

طالبان نے اقوام متحدہ کے مشن میں ایک سال کی تجدید کا خیر مقدم کرتے ہوئے کہا کہ افغان عوام کی فلاح اور بہبود کے لیے کسی کو بھی کام کرنے میں کوئی رکاوٹ نہیں ہوگی تاہم ترجمان طالبان نے ایک بار پھر افغان فنڈز کی بحالی کا مطالبہ کیا ہے۔