Official Website

’حکومت اور اپوزیشن دونوں جلسے ملتوی کردیں، کوئی مرگیا یا مروا دیا گیا توسب پچھتائیں گے‘

67

سابق وزیراعظم و پاکستان مسلم لیگ قائد اعظم (ق) کے سربراہ چوہدری شجاعت نے ارکان قومی اسمبلی کی خریدو فروخت کا حکومتی الزام مسترد کردیا۔

اپنے بیان میں چوہدری شجاعت کا کہنا تھاکہ آج کل ٹی وی اور اخباروں میں آ رہا ہے کہ نوٹوں کی بوریاں کھل گئی ہیں، حتیٰ کہ وزیراعظم نے بھی سندھ ہاؤس میں نوٹوں کی بوریاں کھلنے کا ذکر کیا ہے۔

انہوں نے کہا کہ یہ عدم اعتماد کی پہلی تحریک ہے جس میں نہ کوئی ووٹ خرید رہا ہے اور نہ کوئی ووٹ بیچ رہا ہے، یہ محض پروپیگنڈا ہے۔

چوہدری شجاعت کا مزید کہنا تھاکہ حکومت تو ہمیشہ جلسے جلوس روکنے کی کوشش کرتی ہے لیکن یہ پہلی مرتبہ ہوا ہے کہ حکومت اور اپوزیشن ایک ہی ایشو پر جلسہ کر رہے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ اپوزیشن حکومتی اعلانات دیکھتے ہوئے ہی جلسوں پر اصرار کر رہی ہے۔

سابق وزیراعظم نے اپیل کی کہ حکومت اور اپوزیشن دونوں اپنے جلسے جلوسوں کا پروگرام ملتوی کر دیں، ان جلسے جلوسوں میں اگرکوئی مر گیا یا مروا دیا گیا توسب پچھتائیں گے۔

ان کا کہنا تھاکہ وفاقی وزیر کہتے ہیں کہ 10 لاکھ کے مجمع سے گزر کر عمران خان کے خلاف ووٹ ڈالنا ہو گا، جب کوئی ووٹ ڈالنے کا فیصلہ کر لے تواسے 10 لاکھ تو کیا 10 کروڑ کا مجمع بھی نہیں روک سکتا۔

خیال رہے کہ وزیراعظم عمران خان اور وفاقی وزرا کی جانب سے عدم اعتماد کے معاملے پر ارکان کی خریدو فروخت کا الزام عائد کیا گیا ہے۔